تازہ ترین
فرانس: پاکستان فیسٹیول کے انعقاد کی تیاری کے حوالے سے سفارت خانہ پاکستان پیرس میں سفارتی عملہ و کمیونٹی نمائندگان کے مابین اہم ملاقات         توفیق بٹ پروفیسر کالم نگار جرنلزم روزنامہ نئی بات روزنامہ نوائے وقت روزنامہ پاکستان. کتلان فیڈرشن سپین کی دعوت پر سپین آمد         “بولونیا میں مقیم محمد اسماعیل کی اہلیہ کا انتقال”         نوجوان صحافی و سماجی رہنما نقیب جرال کی جانب سے عتیق چوہدری کی صحتیابی کیلئے دعا کی اپیل         پیرس: سنیر جرنلسٹ ، +سماجی شخصیت شبانہ چوہدری کی صاحبزادی تحریم کی شادی17 اگست بروز بدھ کو عامر خان کے ساتھ انجام پائی         اٹلی کے شہر فیدنذا Fidenza,میں اقلیتیوں سے متعلق کانفرنسMinorities Conference و ادبی سمینار Adbi Seminar کی تقاریب 11 سے 16اگست تک جاری رہیں، ادبی، سماجی و مذہبی موضوعات پر خصوصی نشستوں کا اہتمام کیا گیا ، مقامی و تارکینِ وطن کمیونٹیز نے بھرپور شرکت کی اور معروف و شاعر و دانشور جیم فے غوری اور ان کی پوری ٹیم کی اس شاندار کاوش کو بے حد سراہا         نیویارک میں پاکستان کے جشن آزادی کی تقریبات برونکس میں دعائیہ تقریب، ملک وقوم کی سلامتی کےلئے خصوصی دعا         جشن یوم آزادی پاکستان پروگرام پی سی سی اور پی سی ایف اے کے زیر اہتمام ملی جوش و جذبہ کے ساتھ منایا گیا         پاکستان مسلم لیگ ن آسٹریا کی جانب سے یوم آذادی کی تقریب انعقاد کیا گیا         ولینڈ کے دارالحکومت وارسا میں جشن آزادی پاکستان کی تقریب سے خطاب         سوہنی دھرتی اللہ رکھے ۔قدم قدم آباد تجھے پاکستان بزنس ایسوسی ایشن کے زیراہتمام یوم آزادی پاکستان کی پروقار تقریب         فرانس: بھارت کے یومِ ازادی پر پیرس میں یومِ سیاہ ، کشمیری بہن بھائیوں سے اظہارِ یکجہتی کیلئے پوری پاکستانی و کشمیری کمیونٹی ا مڈ آئی         کوریا کے معروف بزنس مین ملک ندیم پاکستان بزنس اسوسی ایشن تھیگوکوریا کے ہیڈ مقرر         اٹلی: معروف شاعر و دانشور جیم فے غوری نے وطنِ عزیز کے ستر ویں یومِ آزادی کے موقع پر پاکستان قونصلیٹ میلان میں ہونے والی پرچم کشائی کی تقریب میں بھرپور ملی جوش و جزبہ سے شرکت کی         پیرس، وفاقی وزیر تعلیم بلیغ الرحمن کا نجی دورہ پیرس، شمروز الہی گھمن چئیرمین ایڈوائزری کونسل (مسلم لیگ نون یورپ) کا خیر مقدم اور پر تپاک استقبال        

آسمان سے گرا کھجور میں اٹکا

آسمان سے گرا کھجور میں اٹکا

راشد کو کسی کام کے سلسلے میں لاہور جانا تھا۔لاہور کے لئے گاڑی کو ٹھیک چھ بجے روانہ ہونا تھا۔اور ابھی صرف چار ہی بجے تھے۔راشد ایک بیگ میں اپنا سامان رکھ رہا تھا جب سامان پیک ہو گیا تو راشد نے اپنے ایک دوست کمال کو فون کیا اور اسے اپنے گھر آنے کے لئے کہا۔

اطہر اقبال:
راشد کو کسی کام کے سلسلے میں لاہور جانا تھا۔لاہور کے لئے گاڑی کو ٹھیک چھ بجے روانہ ہونا تھا۔اور ابھی صرف چار ہی بجے تھے۔راشد ایک بیگ میں اپنا سامان رکھ رہا تھا جب سامان پیک ہو گیا تو راشد نے اپنے ایک دوست کمال کو فون کیا اور اسے اپنے گھر آنے کے لئے کہا۔
”ڈنگ․․․․ڈونگ․․․․“دروازے پر بیل کی آواز سن کر راشد نے دروازہ کھولا تو کمال کھڑا مسکرا رہا تھا۔
“کیا پروگرام ہے جناب کا؟“کمال نے پوچھا۔”یار کمال تمہیں تو پتا ہی ہے کہ آج میں شام چھ بجے والی گاڑی سے لاہور جارہا ہوں۔تم ایسا کرو کے اپنی موٹر سائیکل پر مجھے اسٹیشن تک چھوڑدو،ذرا کمپنی رہے گی۔“راشد نے کہا اور پھر ساڑھے چار بجے کے قریب راشد،کمال کے ساتھ اسٹیشن کے لئے روانہ ہوگیا۔ابھی موٹر سائیکل نے تھوڑا فاصلہ ہی طے کی تھا کے اچانک جھٹکے لیتی ہوئی بند ہو گئی۔کمال موٹر سائیکل کو ایک طرف کھڑی کر کے اسے دیکھنے لگا۔”ذراجلدی کرو،وقت پر اسٹیشن پہنچنا ہے“۔راشد نے بے قراری سے کہا۔تقریبا بیس منٹ کے بعد موٹر سائیکل دوبارہ اسٹارٹ ہو گئی۔اور دونوں اسٹیشن کی طرف روانہ ہوگئے۔ابھی یہ دونوں صدر کے علاقے تک ہی پہنچے تھے کہ معلوم ہوا کے یہاں ٹریفک جام ہے۔کمال نے کوشش کی کہ اپنی موٹر سائیکل کسی اور راستے سے نکال لے مگر اب اس کے پیچھے بھی کئی گاڑیاں قطار میں لگ چکی تھیں۔لہذا کمال کے لئے ا ب یہ ممکن نہیں رہا تھا کہ وہ اپنی موٹر سائیکل اس رش میں سے نکال سکے۔گاڑیاں آہستہ آہستہ چلتیں اور پھر رک جاتیں۔ٹریفک بہت بری طرح سے جام تھا۔کافی دیر ٹریفک میں پھنے رہنے کے بعد یہ دونوں اسٹیشن پہنچے تو معلوم ہوا کہ ٹرین ابھی ایک منٹ پہلے ہی نکلی ہے۔”یار یہ تو بہت برا ہوا“راشد نے کہا”کیا کریں،پہلے اپنی گاڑی خراب ہوگئی اس میں وقت لگ گیا اور پھر جب موٹر سائیکل اسٹارٹ ہوئی تو ٹریفک میں پھنس گئے“۔
”یعنی آسمان سے گرا کھجور میں اٹکا۔“راشد نے منہ بسورتے ہوئے کہا۔

Related posts