تازہ ترین
آسڑیلیا میں سٹیج پلے کامیڈی چسکہ، پاک آسٹر یلیا کے صدر ارشد نسیم بٹ نے فنکاروں کا پرتپاک استقبال کیا         پیرس کے علاقہ بوبینی میں واقع لاپیلس ریسٹورنٹ میں کشمیری رہنما زاہد ہاشمی کی قیادت میں آل پارٹیز کانفرنس کا انعقاد کیاگیا         ادارہ منہاج القرآن انٹرنیشنل فرانس میں نمازِ جمعتہ المبارک کےبعدچوهدری ممتاز پکهوال کےبزنزپاٹنرسیداجمل حیسن شاہ کےبیٹےکی فاتح خوانی.         بولونیا/اٹلی:: بے گھر افراد سے اظہار یکجہتی کیلئے ہونیوالی واک کی تصویری جھلکیاں، دوسری مدت کیلئے منتخب بولونیا شہر کے 61 سالہ میئر Virginio Merola (انتہائی بائیں) کی بھی شرکت،         بولونیا میں نئے ادارے ”یورو سروسز“ کی افتتاحی تقریب کل ہوگی،         پاکستان تحریک انصاف یو تھ ونگ راولپنڈی کی شان ملک عظیم کا دبئی ائر پو رٹ پر تحریک انصاف یو تھ ونگ یو اے ای نے شاندار استقبال کیا         سویڈن: سفارت کی زمہ داریوں سے سبکدوش ہونے کے بعد سفیر طارق ضمیر کے اعزاز میں الوداعی لنچ کا اہتمام         پیام امن سپین کی صدر جوزفین کرسٹینا نے بارسلونا کی معروف سیاسی سماجی شحصیات انصر اقبال آف اختر کرنانہ اور شاہد چئیرمین سے ملاقات کی اور مختلف امور پر تبادلہ خیال کیا         ادارہ منہاج القرآن انٹرنیشنل فرانس میں نمازِ جمعتہ المبارک کے بعد علامہ حسن میر قادری ڈائریکٹر منہاج چوهدری محمد اعظم صدرمنهاج القرآن انٹرنیشنل فرانس         مسلم لیگ نون یورپ کے چیف کوارڈینیٹر حافظ امیر علی اعوان کی ماضی کے نڈر صحافی کثیر الاشاعت جریدے چٹان کے ایڈیٹر اور شعلہ بیان مقرر شورش کاشمیری کے بیٹے آغا مشہود سے ملاقات اور حاضرہ پر تبادلہ خیال         مسلم لیگ ن سپین کے صدر حاجی راجہ اسد کا بارسلونا ائیر پورٹ پر استقبال. مسلم لیگ ن سپین کے جنرل سیکرٹری الیگزینڈر راجو اور مسلم لیگ ن کتلونئا کے صدر راجہ ساجد .ممتاز سہوترہ اور رضوان زاہد نے پھول پیش کر کے استقبال کیا         اٹلی چوہدری افتخار احمد چھنی اور چوہدری افضال کے اعزاز میں پی ٹی آئی اٹلی عوام دوست گروپ کی طرف سے شاندارعشائیہ         بولونیا میں نئے ادارے ”یورو سروسز“ کی افتتاحی تقریب 22 اکتوبر کو ہوگی، تارکین وطن کو ایک ہی چھت تلے متعدد سہولتیں دستیاب ہونگی، چیف ایگزیکٹو آصف رضا         فیشن ڈیزائننگ کے زریعے دنیا بھر میں پاکستان کا نام روشن کروں گی یو ر پین فیشن ڈیزائنر،نینا خان         جموں کشمیر لبریشن فرنٹ یورپ زون اور بیلجئم برانچ کا ایک اہم اجلاس برسلز میں جموں کشمیر لبریشن فرنٹ یورپ کے صدر تنویر احمد چوہدری کی زیرصدارت منعقد ہوا        

چند گھریلو اشیاء جنہیں فوراََ تبدیل کردینا چاہیے

چند گھریلو اشیاء جنہیں فوراََ تبدیل کردینا چاہیے

عام طور پر گھروں میں کئی ایسی اشیاء استعمال کی جاتی ہیں جنہیں ایک مقررہ مدت کے بعد استعمال نہیں کرنا چاہیے لیکن ہم اس بات سے انجان ہو کرانہیں اس وقت تک استعمال کرتے رہتے ہیں جب تک کہ یہ خود قابل استعمال نہیں رہتیں۔ مگر ان گھریلو اشیاء کا طویل مدت تک مسلسل استعمال انسان کی صحت پر مضر اثرات مرتب کرسکتا ہے ۔ آئیے ہم آپ کو آج کے آرٹیکل میں چند ایسی گھریلو اشیاء کے بارے میں بتاتے ہیں۔
تولیے :
نہانے یا ہاتھ دھونے کے بعد تولیے کااستعمال ضرور کیاجاتا ہے لیکن اگر تولیہ ہی جراثیموں سے بھرپور ہو تو پھر نہانے یا ہاتھ دھونے کا کوئی فائدہ نہیں رہتا۔ کوشش کریں کہ ہرسال گھر کے تمام تولیے ضرور بدل دیں اور دوران استعمال بھی انہیں اچھی طرح دھو کر رکھیں ۔
کنگھی :
شاید ہی کوئی ایساشخص ہوجو یادرکھتا ہو کہ اس سے نئی کنگھی کب خریدی تھی کیونکہ عموماََ انہیں تب ہی تبدیل کیاجاتا ہے جب پچھلی ناقابل استعمال ہوجاتی ہے۔ لیکن آپ کو چاہیے کوسال میں ایک مرتبہ ضرور نئی کنگھی خریدیں اور پرانی کوبھی دوران استعمال دھوئیں ضرور تاکہ وہ جراثیم سے پاک رہے ۔
جوتے :
اکثر دیکھا گیا ہے کہ گھروں میں پہنے جانے والے جوتے لوگ ایک طویل مدت تک استعمال کرتے ہیں لیکن یہ درست نہیں۔ اگر آپ انہیں تبدیل نہیں کرتے تو کم سے کم دھو ضرورلیں۔ ماہرین کے مطابق ہر 6ماہ بعد جوتے تبدیل ضرور کرنے چاہیے کیونکہ یہ پاؤں میں انفکیشن کا باعث بن سکتے ہیں ۔
سپونج:
اگر صحت مندرہنا چاہتے ہیں تو برتن دھونے کے لیے استعمال کیاجانے والا سپونج ہاماہ ضرور تبدیل کیا کریں کیونکہ برتنوں کی دھلائی کے دوران جراثیم بڑی تعداد میں برتنوں سے سپونج میں منتقل ہوجاتے ہیں۔ اور اس طرح یہ دیگر اشیاء تک بھی پہنچ جاتے ہیں۔
ٹوتھ برش :
عام طور پر دیکھا گیا ہے کہ جب تک ٹوتھ برش ٹوٹے نہیں اسے تبدیل نہیں کیا جاتا۔ یہ عمل بھی آپ کی صحت کے لیے درست نہیں۔ ٹوتھ برش کو بھی زیادہ طویل عرصے تک استعمال نہ کریں کیونکہ جراثیم انہیں اپنا گھر بنالیتے ہیں جہاں سے وہ آپ کے منہ میں منتقل ہوجاتے ہیں۔ کوشش کریں کہ ہر 3ماہ بعد اپنا ٹوتھ برش ضرورتبدیل کردیں۔
تکیے :
اکثر لوگوں کو اپنے من پسند تکیے کے بغیررات کو نیند نہیں آتی اور اس لیے پر سکون نیند میں تکیے کا بھی ایک اہم کردار ہوتاہے۔ تاہم ماہرین کے مطابق تکیے کو دوسال کے بعد ضرور یبدیل کردینا چاہیے ورنہ اس میں پائے جانے والے جراثیم سر میں انفیکشن کے علاوہ سراور کندھوں میں درد کاسبب بھی بن سکتے ہیں۔

Related posts